پاکستان انٹرنیشنل پریس ایجنسی

سعودی عرب کے شہر مکہ میں تیز رفتار کار مسجد الحرام کے دروازے سے ٹکرا گئی، ڈرائیور ’غیر معمولی حالت‘ میں گرفتار

سعودی عرب کے سرکاری خبر رساں ادارے کے مطابق ایک تیز رفتار کار مکہ میں موجود مسجد الحرام سے ٹکرائی ہے لیکن کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔

سرکاری اطلاعات کے مطابق اس گاڑی میں ایک سعودی شہری سوار تھا اور یہ واقعہ جمعے کی شب 10 بج کر 30 منٹ کے قریب پیش آیا۔پولیس نے کار میں موجود ڈرائیور کو گرفتار کر لیا جو سرکاری اطلاعات کے مطابق ’غیر معمولی حالت‘ میں تھا۔ حکام نے اس کی وضاحت نہیں کی اور نہ ہی گرفتار شخص کے متعلق مزید معلومات فراہم کی ہے۔سعودی خبر رساں ادارے کے مطابق اس شخص کے خلاف قانونی کارروائی کا آغاز کیا جا چکا ہے۔

سرکاری چینل قرآن ٹی وی پر حادثے سے قبل اور بعد میں مسلمانوں کو خانہ کعبہ کا طواف کرتے دیکھا جاسکتا ہے۔ امکان ہے کہ اس دوران اندر موجود افراد حادثے سے لاعلم رہے۔

کورونا وائرس کی عالمی وبا کے دوران حکام نے کچھ عرصے کے لیے مسجد الحرام میں داخلے پر پابندی عائد کر رکھی تھی لیکن بعد میں اسے کھول دیا گیا تھا اور یہاں داخل ہونے والوں کے لیے

رواں سال جولائی میں سعودی عرب نے بیرون ملک سے آنے والے حاجیوں کی مکہ آمد پر مکمل طور پر پابندی عائد کی تھی۔ صرف سعودی عرب میں پہلے سے موجود غیر ملکی حاجیوں کو حج کا فریضہ ادا کرنے کی اجازت دی گئی تھی۔

سعودی حکام نے کورونا وائرس کی وبا کے پیش نظر صرف دس ہزار افراد کو حج ادا کرنے کی اجازت دی تھی۔

یاد رہے کہ عام طور پر ہر سال بیس لاکھ سے زیادہ افراد حج کے موقع پر سعودی عرب کے شہر مکہ میں جمع ہوتے ہیں جس کے بعد وہ مدینہ جاتے ہیں۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.