پاکستان انٹرنیشنل پریس ایجنسی

سیالکوٹ صحافت کی بھینٹ چڑھنے والے شہید صحافی”ذیشان اشرف بٹ کی روح بھی انصاف کی منتظر،چار سال بیت گئے مرکزی ملزم ابھی تک آزاد

سیالکوٹ صحافت کی بھینٹ چڑھنے والے شہید صحافی”ذیشان اشرف بٹ کی روح بھی انصاف کی منتظر،چار سال بیت گئے مرکزی ملزم ابھی تک آزاد، آفیسران کے ملزم کو جلد گرفتار کرنے کے دعوے بھی بے سود،مقتول صحافی کے اہلخانہ سراپاء احتجاج،نئے تعینات ہونے والے ڈی پی او سیالکوٹ سے ملزم”عمران اسلم چیمہ” کو گرفتار کرنے کا مطالبہ۔تفصیلات کے مطابق صحافتی امور سرانجام دیتے ہوئے تقریبا تین سال قبل یونین کونسل بیگووالہ کے چئیرمین”عمران اسلم المعروف عمرانی چیمہ” نے ذیشان اشرف بٹ کو فائرنگ کرکے موت کے گھاٹ اتار دیا تھا اور موقعہ واردات سے فرار ہونے میں کامیاب ہو گیا۔تین سالوں کے دوران پولیس مرکزی ملزم کو تو گرفتار نہیں کر سکی بلکہ اتنے عرصہ میں 4 ڈی پی اوز تبدیل ہو چکے ہیں اور ہر نئے تعینات ہونے والے ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر سیالکوٹ نے شہید صحافت "ذیشان اشرف بٹ”کے اہلخانہ کو جھوٹی تسلیوں کے علاوہ کچھ بھی نہیں دیا جبکہ شہید صحافی کے اہلخانہ انصاف کے حصول کی خاطر دفاتر کے چکر لگا لگا کر تھک گئے ہیں لیکن ملزم ابھی تک بھی گرفتار نہیں ہو سکا۔ملزم کی عدم گرفتاری کے باعث مقتول صحافی کے اہلخانہ کے سروں پر موت کے سائے منڈلا رہے ہیں کیونکہ ملزم عمران اسلم عرف عمرانی چیمہ بااثر ہے اور ذرائع کے مطابق اس کے اجرتی قاتلوں کے ساتھ گہرے مراسم بھی ہیں۔شہید صحافی”ذیشان اشرف بٹ” کی بوڑھی والدہ نے روتے ہوئے پولیس کے اعلی حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ میرے بیٹے کے قاتل عمران اسلم عرف عمرانی چیمہ کو گرفتار کرکے کیفرکردار تک پہنچایا جائے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.