پاکستان انٹرنیشنل پریس ایجنسی

لاہور ٹریفک کے دباؤ پر قابو پانے کیلئے بزدار حکومت کا منصوبہ تکمیل کے قریب پہنچ گیا۔ شہر میں پہلا 540 میٹر طویل فردوس مارکیٹ انڈر پاس کا افتتاح 20 نومبر کو ہو گا۔

لاہور ٹریفک کے دباؤ پر قابو پانے کیلئے بزدار حکومت کا منصوبہ تکمیل کے قریب پہنچ گیا۔ شہر میں پہلا 540 میٹر طویل فردوس مارکیٹ انڈر پاس کا افتتاح 20 نومبر کو ہو گا۔ ڈی جی ایل ڈی اے نے باقاعدہ اعلان کر دیا۔ شہریوں نے انڈر پاس کی تعمیر پر خوشی کا اظہار کیا۔ گلبرگ میں ٹریفک کا دباؤ کنٹرول کرنے کے لئے اہم قدم، فردوس مارکیٹ انڈر پاس تکمیل کے قریب پہنچ گیا۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نےاپنی حکومت کے پہلے انڈر پاس کی تعمیر کا سنگ بنیاد 18 مئی 2020 کو رکھا۔ منصوبے پر مجموعی طو رپر ایک ارب 746 کروڑ اور تعمیراتی لاگت کا تخمینہ ایک ارب 9 کروڑ روپے لگایا گیا۔ حکومت نے ٹینڈرنگ کے ذریعے تعمیراتی لاگت میں 13 کروڑکی خطیر رقم کی بچت کی اور تعمیراتی لاگت 96 کروڑ روپے تک جا پہنچی۔ انڈر پاس کی تعمیر کے لیے 3 ماہ کی ڈیڈ لائن دی گئی مگر 5 ڈیڈ لائن پر بھی منصوبہ مکمل نہ ہو سکا۔ پہلی ڈیڈ لائن 6 ستمبر 2020، دوسری 15 ستمبر، تیسری 6 اکتوبر، چوتھی 15 اکتوبر اور پانچویں 30 اکتوبر دی گئی۔ ڈی جی ایل ڈی اے احمد عزیز تارڑ نے افتتاح کے لیے 20 نومبر کی تاریخ کا اعلان کر دیا۔ فردوس مارکیٹ کے رہائشیوں نے منصوبہ مکمل ہونے پر خوشی کا اظہار کیا اور کہا کہ انڈر پاس سے ٹریفک کا دباؤ کم ہوگا اور شہریوں کو سہولت ملے گی۔دورویہ انڈرپاس 540 میٹر طویل اور دونوں طرف سے دو دو لین پر مشتمل ہے۔ بارشی پانی کے اخراج کے لئے خصوصی اقدامات کئے گئے اور منصوبے کے لئے 7 کنال اراضی ایکوائر کی گئی ہے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.