پاکستان انٹرنیشنل پریس ایجنسی

کمشنر راولپنڈی کیپٹن (ر) محمد محمود نے کہا ہے کہ راولپنڈی ضلع میں کورونا کے مریضوں میں اضافہ شدت اختیار کر رہا ہے

کمشنر راولپنڈی کیپٹن (ر) محمد محمود نے کہا ہے کہ راولپنڈی ضلع میں کورونا کے مریضوں میں اضافہ شدت اختیار کر رہا ہے اور ایک ماہ میں روزانہ نئے مریضوں میں 10گنا اضافہ ہو چکا ہے جو کہ ایک واضح اشارہ ہے کہ کورونا وائرس کی دوسری لہر تیزی سے بڑھ رہی ہے۔تعلیمی اداروں میں کورونا کے پھیلاؤ کے حوالے سے خصوصی توجہ دی جا رہی ہے اور 15ستمبر سے چار مراحل میں تعلیمی اداروں سے کورونا کے 17ہزار سے زائد ٹیسٹ کئے گے جن میں 124اساتزہ، سٹوڈنٹس اور عملہ میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی اور مجموعی طور پر 38 تعلیمی ادارے سر بمہر کئے گے ہیں۔یہ باتیں انہوں نے ڈپٹی کمشنر آفس راولپنڈی میں ایک اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیں جس میں ڈپٹی کمشنر راولپنڈی کیپٹن(ر)انوار الحق، ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ہیڈکوارٹر راولپنڈی ماہم , آصف اور دیگر متعلقہ حکام شریک ہوئے۔ اجلاس میں راولپنڈی میں کورونا مریضوں میں اضافہ کی صورتحال اور پولیو اور ڈینگی کے روک تھام کا تفصیلی جائزہ لیا۔کمشنر راولپنڈی کیپٹن (ر) محمد محمود نے کہا کہ کورونا کے پھیلاؤ کے حوالے سے راول ٹاؤن اور پوٹھوہار ٹاؤن زیادہ حساس ہیں اور کورونا کے زیادہ مریض بھی انہی علاقوں میں ہیں اور کورونا کی وجہ سے زیادہ اموات بھی یہاں ہی ہوئی ہیں۔انہوں نے ضلعی انتظامیہ کو ہدایت کی کہ سمارٹ لاک ڈاون والے علاقوں کی مکمل نگرانی کی جائے اور انتظامیہ پبلک مقامات خصوصی طور شادی ہالز اور ریسٹورنٹس میں کورونا ایس او پیز پر عمل درآمد یقینی بنائے اور خلاف ورزی پر سخت قانونی کاروائی کی جائے۔ کمشنر کیپٹن (ر) محمد محمود نے کہا کہ راولپنڈی کے ماحولیاتی نمونوں میں پولیو وائرس میں اضافہ بھی قابل تشویش ہے اور اس کے تدارک لئے بھی جامع حکمت عملی کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ محکمہ صحت کے اعدادوشمار کے مطابق 2019اور 2020میں پولیو کے کیسز میں بھی اضافہ ہوا ہے اور اس کی وجہ کورونا کی وجہ سے انسداد پولیو مہم میں تعطل ہے۔ انہوں نے کہا کہ پولیو مہم کے 100فیصد نتائج حاصل کئے جائیں اور جن علاقوں میں والدین بچوں کو پولیو کو قطرے پلانے سے انکار کریں ان کو قائل کریں اور ناگزیر ہو تو قانونی کاروائی عمل میں لائی جائے۔ انہوں نے کہا کہ ڈینگی کے حوالے سے صورت حال گزشتہ برسوں کی نسبت کافی تسلی بخش ہے مگر ڈینگی سے بچاؤ کی مہم جاری رکھی جائے اور ہاٹ سپاٹس کی نشاندہی کی جائے اور ان کی مسلسل نگرانی کی جائے۔ انہوں نے انسدادِ ڈینگی مہم میں کام کرنے والی ٹیموں کی تربیت پر زور دیا اور کہا کہ مسلسل منصوبہ اور کوششوں ہی سے ڈینگی سے بچاؤ ممکن ہے۔اس موقع پر کمشنر راولپنڈی کو کورونا، پولیو اور ڈینگی کے حوالے سے تفصیلی علیحدہ علیحدہ تفصیلی بریفنگ دی گئی۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.