پاکستان انٹرنیشنل پریس ایجنسی

پمز ہسپتال کے ملازمین کا ایم ٹی آئی آرڈیننس کے خلاف احتجاجی مظاہرہ

پمز ہسپتال کے ملازمین کا ایم ٹی آئی آرڈیننس کے خلاف احتجاجی مظاہرہ,پمز ہسپتال کے 5 ہزار ملازمین گذشتہ 5 روز سے احتجاج کر رہے ہیں.میڈیکل ٹیچنگ انسٹیٹیوشن آرڈیننس کی صدر پاکستان نے منظوری دے دی ہے جو ملازمین کے لیے زہر قاتل ہے۔مظاہریناس ایکٹ کے نفاظ سے 5 ہزار پمز کے ملازمین کہ ساتھ ساتھ ہزاروں مریض بھی مفت علاج کی سہولت سے محروم ہو جائیں ۔

پمز ہسپتال میں آزاد کشمیر، گلگت بلتستان، خیبر پختون خواہ، راولپنڈی اور اسکے گرد و نواح سے غریب اور نادار مریض علاج کے لیے آتے ہیں ۔اس آرڈیننس کے نفاظ سے یہ مریض بھی علاج معالجہ کی مفت سہولت سے محروم ہو جائیں گے ۔مظاہرین کے مطالبات تسلیم نہ کیے گئے تو پمز ہسپتال کے 5 ہزار ملازمین، ہیلتھ کمیونٹی تمام وفاقی اداروں کے ملازمین، تاجر برادری سول سوسائٹی وکلاء کے ساتھ ملکر پارلیمنٹ ہاوس کے سامنے مطالبات کی منظوری تک دھرنا دیا جائے گا ۔مظاہرین

Leave A Reply

Your email address will not be published.